بتاؤ۔۔۔ دو گے میرا ساتھ؟

جب ہم پہ کوئی مصیبت آتی ہے، ہم تھورے ہاتھ پاؤں تو مارتے ہیں، کوشش میں تو لگتے ہیں، دوستوں، جاننے والوں سے مدد مانگتے ہیں، کچھ نہیں ہوپاتا تو چیختے چلاتے ہیں اور پھر تنگ آکر اللہ سے دعا بھی کرتے ہیں۔۔ سب سے آخر میں اور پھر وہ بھی فارمیلٹی پوری کرنے کے لیے۔
کبھی ایسا بھی کریں کہ بھول جائیں اپنی سب نیکیاں اور سب گناہ، بھول جائیں اپنا رتبہ اور اپنا سٹینڈرڈ، بھول جائیں اپنی انا کو، بھول جائیں اپنی ذات پات، فرقہ، رنگ اور نسل، بھول جائیں کہ کہاں بیٹھے، کیا کر رہے ہیں اور پورے دل، آنکھیں بند کیے، نام لیں اس کا جس نے ہمیں بنایا اور بھیجا یہاں، نام لیں اپنےرب کا، اللہ کا اور مانگیں اس سے، جیسے مانگتے تھے اپنے ماں باپ سے، ویسےہی یقین سے، پورے ایمان سے، مانگیں اس سے اپنے وطن کے لوگوں کے لیے، بولیں اس سے کہ مدد کرے ہماری، ہمیں بتائے کہ ہم کیا کریں، کیسے بچائیں اپنے مزید بچوں کو مرنے سے، قتل ہونے سے۔ ہمیں بتائے کہ ہم امن کیسے لائیں، بھر دے ہمارے دل حق سے۔۔ اک بار ایسے مانگ کر تو دیکھو، وہ دےگا، اور وہ بتائے گا، صرف اک وہی ہے جو بتا سکتا ہے! ڈال دے گا وہ دل میں۔۔۔

بتاؤ۔۔ مانگو گے میرے ساتھ؟ مانگو گے اپنے رب سے؟ ابھی؟

Advertisements

ایک خیال “بتاؤ۔۔۔ دو گے میرا ساتھ؟” پہ

جواب دیں

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

آپ اپنے WordPress.com اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Twitter picture

آپ اپنے Twitter اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Facebook photo

آپ اپنے Facebook اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Google+ photo

آپ اپنے Google+ اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Connecting to %s